ہمارے رہنما خواتین کے عالمی دن پر کیا کہتے ہیں ؟آئیے پڑھتے ہیں

EjazNews

فاطمہ جناح سے لے کر بلقیس ایدھی تک سب نے پاکستان کی تعمیر وترقی میں اپنا اہم کر دار ادا کیا کس بھی معاشرے کی ترقی خواتین کی ترقی کے بغیر ممکن نہیں، آج ہم یہ عہد کرتے ہیں کہ اپنے ملک کی خواتین کو برابر کے حقوق دیں گے اور ان کی تعلیم و تربیت پر بھرپور توجہ دیںگے۔ آئیے دیکھتے ہیں ہمارے رہنما کیا کہتے ہیں۔
وزیراعظم عمران خان کہتے ہیں یوم نسواں کے موقع پر ہم محترمہ فاطمہ جناح کو سلام عقیدت پیش کرتے ہیں جو قیام پاکستان کی جدوجہد کے دوران جناب قائد کے ساتھ ڈٹی رہیں۔ ہم خواتین کیلئے محفوظ اور سازگار ماحول فراہم کر نے کے عہد کی تجدید کرتے ہیں تاکہ وہ اپنی اہلیت کے مطابق قومی تعمیر و ترقی میں اپنا حصہ ڈال سکیں۔
اپوزیشن لیڈر میاں شہبازشریف کہتے ہیں آج کا دن فخر کا ہے ان خواتین پر جو اپنی فیملی اور ملک کو مضبوط بنارہی ہیں۔ پاکستانی خواتین کی جدوجہد طویل ہے لیکن ابھی بہت کچھ کرنا باقی ہے۔ میں اس بات پر مطمئن ہوں کہ مسلم لیگ ن نے خواتین کو مضبوط بنانے کیلئے اصلاحات متعارف کروائیں۔خواتین کو بااختیار بنانے کیلئے ہمارا عزم صمیم ہے۔
بلاول بھٹوزرداری کہتے ہیں میں شہید بے نظیر بھٹو کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں جو کہ اسلامی دنیا میں پہلی خاتون وزیراعظم بنیں اور 30سال تک سیاسی پارٹی کو بھی چلایا۔
وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کہتے ہیں میں بطور والد اپنی بیٹیوں کو کہتا ہوں کہ چیلنجز میں اپنی آواز کو پہچانیں۔آج کا دن ہم ان خواتین کی یاد میں مناتے ہیں جنہوں نے دنیا میں کچھ ایسا کیا جس سے پوری دنیا متاثر ہوئی ۔ مجھے یقین ہے کہ پاکستان کی ہرخاتون اپنے آپ کو پہچانے گی۔ یہ پاکستان ہے جس کی تعمیر ہم کر رہے ہیں۔
وزیرخزانہ اسد عمر کہتے ہیں خواتین کے عالمی دن پر ہمیں یہ یاد رکھنا چاہیے کہ پاکستان کو ایک ترقی یافتہ ملک بننے کیلئے اپنی نصف آبادی کی صلاحیتوں سے بھرپور فائدہ اٹھانے کی ضرورت ہے۔
وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کہتے ہیں پی ٹی آئی کی حکومت ہر سطح پر خواتین کو مضبوط بنانے اور ان کی شمولیت یقینی بنا رہی ہے تاکہ نئے پاکستان میں وہ بھی اپنا کر دار ادا کرسکیں۔
عندلیب عباس کہتی ہیں وجود زن سے ہے تصورکائنات میں رونق

یہ بھی پڑھیں:  خطے کی کشیدہ صورتحال : فوجی قیادت کو آئی ایس آئی ہیڈ آفس میں بریفنگ