نفرتوں کی بھینٹ چڑھنے والے شاکر اللہ کی نماز جنازہ ادا کر دی گئی

EjazNews

پلوامہ حملے کے بعد انڈیا کی جیل میں قیدی ایک پاکستانی کو قیدیوں نے حملہ کر کے قتل کر دیا تھا۔ اس مظلوم کو پتھر مار مار کر قتل کیا گیا۔ شاکر اللہ کو سیالکوٹ میں اس کے آبائی گائوں کے مقامی قبرستان میں سپرد خاک کر دیا گیا ہے۔ نماز جنازہ میں لوگوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔
جب ہم نے شاکر اللہ کے موضوع پر تجزیہ کار خالد رشید سے بات کی تو ان کا کہنا تھا یہ نفرت ان کے اپنے معاشرے کو بھی لپیٹ میں لیے ہوئے ہے۔ وہاں سوال پوچھنے کی آزادی نہیں ہے۔ ورنہ انڈیا کے نام نہاد سرجیکل سٹرائیک اور ائیر سٹرائیک کا کوئی تو ثبوت ہوتا ہے۔ کوئی لاش، کوئی ایوڈینس کچھ بھی نہیں۔ ایف سولہ کے معاملہ پر عجیب و غریب تصاویر اور افغانستان سے ایف سولہ کا ڈھیر جس کو پوری دنیا نے بے نقاب کیا۔ انٹرنیشنل میڈیا نے اس کی کھلیا ں کھولیں۔یہ نفرت ان کے اپنے معاشرے کو پوری طرح تباہ کر چکی ہےاور کررہی ہے ۔انڈیا اب کوئی سیکولر ملک نہیں ہے یہ ہندو نیشنلسٹ کی طرف تیزی سے بڑھتا ہوا ملک ہے۔یہ نفرتوں کا نتیجہ ہوتا ہے ۔ یہ شدت پسندی ہے جس کا ڈر وہاں کے دوسرے لوگوں کو بھی ہے جو کسی بھی صحیح بات پر اپنی زبان نہیں کھولتے کہ پتہ نہیں کیاہوجائے گا۔

یہ بھی پڑھیں:  میڈیا سے وابستہ افراد کے تحفظ کے بل کی کابینہ نے اصولی منظوری دے دی:معاون خصوصی ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان