پہلی خاتون سفیر

سعودی تاریخ میں پہلی دفعہ کوئی خاتون سفیر مقرر

EjazNews

شہزادی ریمابنت بندر السعود ریاض سعودی عرب میں پیدا ہوئیں۔ان کے والد بندر السعود 1983ء سے 2005ء تک امریکہ میں بطور سفیر تعینات رہے۔ جہاں شہزادی ریما نے جارج واشنگن یونیورسٹی سے اپنی تعلیم مکمل کی ہے۔
سعودی عرب کے سرکاری میڈیا کے مطابق سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان کے بیٹے شہزادہ خالد بن سلمان کی جگہ اب شہزادی ریما بنت بندر السعود کوامریکہ میں سعودی سفیر مقرر کیا گیا ہے۔ شہزادہ خالد بن سلمان اب سعودی عرب کے ڈپٹی وزیر دفاع کی حیثیت سے خدات سرانجام دیں گے۔ اس سلسلے میں باضابطہ طور پر شاہی فرمای جاری ہو گیا ہے۔
شہزادی ریمانے اپنی تعلیم مکمل کر نے کے بعد بہت سے سرکاری اور نیم سرکاری اداروں کے ساتھ کام کیا ہے۔ سعودی عرب میں خواتین کے ہیلتھ سیکٹر میں ان کی خدمات قابل تعریف ہیں۔وہ بہت سی کمپنیوں میں بطور سی ای او بھی کام کر چکی ہیں جبکہ وہ خواتین کے ابتدائی کاروبار ی معاملات کی ورلڈ بینک کی مشاورتی کونسل کی ممبر بھی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  سری لنکا میں مختلف مقامات پردھماکے