علیم خان 10روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے

EjazNews

آمدن سے زائد اثاثوں اورآف شور کمپنی رکھنے کے الزا میں پاکستان تحریک انصاف کے سابق صوبائی وزیرعلیم خان کو لاہور کی احتساب عدالت میں پیش کیا گیا۔ معزز جج نجم الحسن بخاری نے علیم خان کے خلاف کیس کی سماعت کی۔سماعت کے دوران نیب پراسیکیوٹر نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ علیم خان 2000ءتک ایک عام شخص تھی ان کے پاس اچانک اتنی دولت کہاں سے آئی۔ جس سے ان کی 35کمپنیاں بن گئیں اور سینکڑوں اکاﺅنٹس ۔ عدالت نے جب استفسار کیا کہ نیب بنائے اس نے 9روز ہ جسمانی ریمانڈ میں کیا کیا جس پر نیب پراسیکوٹر نے 31گواہوں کو بلایا جن میں سے 7لو گ آئے۔

پراسیکوٹر نے کہا کہ علیم خان کے والدین کے اکاﺅنٹ میں 15کروڑ آئے جس کا کوئی اتا پتہ نہیں وہ کس نے بھجوائے۔ اور یہ رقم اگلے ہی روز علیم خان کے اکاﺅنٹ میں جمع ہو گئی۔ اس کے علاوہ 90کروڑ کی جائیداد دبئی میں خرید۔انہوں نے نہیں بتایا کہ دبئی میں خریدی گئی جائیداد کے لیے پیسے کیسے بھجوائے۔

یہ بھی پڑھیں:  شاداب خان پاکستان سپر لیگ کی تاریخ کے سب سے کم عمر کپتان بن گئے ہیں

عدالت نے جب کہا کہ دبئی میں علیم خان کی جائیداد ہے یہ آپ کیسے کہہ رہے ہیں جس پر پراسیکوٹر نے کہا کہ علیم خان یہ جائیداد تسلیم کر رہے ہیں مگر کاغذات نہیں دے رہے۔

علیم خان کے وکیل کا کہنا تھا کہ نیب حقائق کو تروڑمروڑ کر پیش کر رہا ہے۔ علیم خان کے وکیل کا کہنا تھا کہ تمام دستاویزات دے چکے ہیں اور ہر ہر طرح سے تعاون کر رہے ہیں۔ ڈی جی نیب خود تسلیم کر چکے ہیں کہ تما م دستاویزات موجود ہیں۔

جب عدالت نے علیم خان سے مکالمہ کیا تو ان کا کہنا تھا کہ 35میں سے صرف 2کمپنیاں کام کر رہی ہیں۔

وکیل علیم خان نے کہا کہ گرفتاری آف شور کمپنی میں کی بعد میں آمدن سے زائد اثاثوں میں پیش کر دیا جو منسٹریتھی اس میں 3سال میں 9کروڑ فنڈ ملا۔ اس میں کیا کرپشن ہو سکتی ہے۔ علیم خان کے وکیل کا کہنا تھا کہ وہ اپنے والدین کوآنے والے پیسوں کے جوابدہ نہیں ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:  پاکستان نے امن کیلئے انڈین پائلٹ کو رہا کر دیا

عدالت نے تمام دلائل سننے کے بعد علیم خان کا 10روزہ جسمانی ریمانڈ منظور کر لیا۔

وکیل علیم خان نے کہا کہ گرفتاری آف شور کمپنی میں کی بعد میں آمدن سے زائد اثاثوں میں پیش کر دیا جو منسٹریتھی اس میں 3سال میں 9کروڑ فنڈ ملا۔ اس میں کیا کرپشن ہو سکتی ہے۔ علیم خان کے وکیل کا کہنا تھا کہ وہ اپنے والدین کوآنے والے پیسوں کے جوابدہ نہیں ہیں۔

عدالت نے تمام دلائل سننے کے بعد علیم خان کا 10روزہ جسمانی ریمانڈ منظور کر لیا۔