Turk-dramam

دلیرس ارتغل صرف ڈرامہ نہیں 7سوسال کی تاریخ ہے

EjazNews

ارطغرل میں ایسا کیا ہے جس کی وجہ سے وزیراعظم عمران خان نے اسے پی ٹی وی پر نشر کرنے کے لیے کہا تھا۔یہ صرف ایک ڈرامہ نہیں ہے بلکہ ایک پوری تاریخ ہے۔
اس ڈرامہ سیریل میں ترکوں کی تاریخ کا وہ دور ہے جس پر ترک آج بھی فخر کرتے ہیں۔ اس ڈرامہ میں دکھایا گیا ہے کہ کیسے اندرونی سازشوں کے ذریعے اپنے ہی ملک کو کمزور کیا جاتا ہے اور کیسے ایک ایماندار معمولی سطح سے اٹھنے والا حکمران ایک ایسی سلطنت کی بنیاد رکھتا ہے جو آنے والے وقت میں سلطنت عثمانیہ بن جاتی ہے۔
بڑے خوبصورت طریقے سے دکھایا گیا ہے کہ وطن سے محبت کیا چیز ہوتی ہے اور مذہب کا زندگی میں کیا کردار ہوتا ہے۔
یہ ڈرامہ سیریل 2014ء میں ترکی کے سرکاری چینل ٹی آر ٹی پر نشر کیا جاتا رہا ہے۔ پاکستا ن میں ترکی کے ڈراموں کو پسند کرنےوالی ایک بڑی اکثریت موجود ہے اس ڈرامہ سیریل کو کچھ لوگوں نے اپنی مدد آپ کے تحت اردو میں ڈب کرنے کی کوشش بھی کی ہے جو کہ فیس بک اور یوٹیوب پر نشر کیا جاتا رہا ہے۔اس کی پکچرائزیشن پر بہت محنت کی گئی ہے اور پوری طرح خیال رکھا گیا ہے کہ ڈرامہ دیکھنے والے کچھ اقساط کے بعد کہیں بور ہونا شروع نہ ہو جائیں۔اس ڈرامہ میں ایک قوم کے بننے کی تاریخ پوشیدہ ہے کہ کیسی سازشیں تھیں ، کس طرح کے پروپیگنڈے تھے اور کتنی مشکلات تھی لیکن اس کے باوجود ایک قوم بنی اور اس نے 7سو سال تک دنیا پر حکمرانی بھی کی۔
ترک ڈرامہ کو اردو میں ڈب کر کے پاکستان ٹیلی ویژن سے ریلیز کیا جارہا ہے ۔ امید کرتے ہیں جیسے دنیا بھر کے لوگوں نے اسے پسند کیا تھا پاکستان میں بھی اسے اسی طرح پسند کیا جائے گا۔
یہاں اپنی ڈرامہ انڈسٹری کیلئے بھی ایک توجہ طلب بات ہے کہ خدارا ساس ،بہو ۔ میاں بیوی سے باہر بھی دنیا ہے کچھ ایسا بھی سوچو کہ ہماری ڈوبتی ڈرامہ سیریز کو کچھ سہارا ملک جائے۔

یہ بھی پڑھیں:  بالی وڈ کی سینئر اداکارہ کرن کھیر بلڈ کینسر کے موذی مرض میں مبتلا ہو گئی ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں