ihsam ul haq tenes star

سری لنکا ، بنگلہ دیش کی ٹیم، ہزاروں بھارتیوں کو پاکستان میں سکیورٹی کا کوئی مسئلہ نہیں تو پھر ڈیوس کپ کی میزبانی پاکستان سے کیوں لی گئی؟

EjazNews

پاکستانی ٹینس سٹار اعصام الحق نے احتجاجاً بھارت کیخلاف ڈیوس کپ کھیلنے سے انکار کر دیا۔ اعصام الحق کا کہنا ہے کہ آئی ٹی ڈیوس کپ ٹائی پاکستان سے باہر ہوتا ہے تو وہ احتجاجاً شرکت نہیں کریں گے۔ میں نے ہمیشہ پاکستان کیلئے کھیلنے کو ترجیح دی ہے ۔ یہ ملک کے وقار کیلئے کھڑے ہونے کا وقت ہے۔
اعصام الحق نے کہا انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن نے پاکستان کیخلا ف غیر منصفانہ فیصلہ کیاہے۔ پاکستان میں سکیورٹی کو جواز بنا کر ڈیوس کپ ٹائی کو کسی دوسرے ملک میں منتقل کرنا قابل افسوس ہے۔ پاکستان میں ہزار بھارتی کرتار پورراہداری اور دورسے مختلف مقامات پر آزادانہ گھوم پھر رہے ہیں، کسی بھارتی کو سکیورٹی کے حوالے سے کوئی مسئلہ نہیں۔سری لنکا کی ٹیم پاکستان میں کھیل چکی ہے ، بنگلہ دیش کی ٹیم بھی کھیل کر گئی ہے۔ برطانوی شاہی جوڑا پاکستان آکر ملک میں سیرو سیاحت کرتا رہا ہے۔ ایسے میں آل انڈیا ٹینس ایسوسی ایشن کے کہنے پر مقابلے بیرون ملک منتقل کر دینا پاکستانی عوام سے زیادتی ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ اگر ڈیوس کپ ٹینس ٹائی نیوٹرل مقام پر کرانے کا فیصلہ واپس نہ لیا گیا تو اس ایونٹ میں شرکت نہیں کروں گا۔انٹرنیشنل ٹینس فیڈریشن کے اس دہرے معیار اور بھارت دوست رویے پر احتجاج کررہا ہوں۔
29نومبر کو ٹینس کا ڈیوس کپ اسلام آباد میں ہونا تھا جس میں بھارٹی ٹیم نے بھی پاکستان میںآنا تھا تاہم اب یہ نیوٹرل ملک میں کرانے کاا علان کیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  جہانگیر ترین اور علی ترین نے ضمانت قبل از گرفتاری کرالی

اپنا تبصرہ بھیجیں