bilawal-victory

پیپلز پارٹی کسی دھرنے میں حصہ نہیں لے رہی تاہم کور کمیٹی فیصلہ سے متعلق نظرثانی کر سکتی ہے:بلاول بھٹوزرداری

EjazNews

چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے وکٹوریہ ہسپتال بہاول پور میں لیاقت پور ٹرین حادثے میں زخمیوں کی عیادت کے بعد میڈیا سے گفتگو کی جس میں ان کا کہنا تھا ،رحیم یار خان ٹرین حادثہ کی صاف و شفاف تحقیق ہونی چاہئے اور سلیکٹڈ حکومت کو اس واقعہ کے ذمہ دار وزیر ریلوے سے فل فور استعفیٰ لینا چاہئے۔حکومت کو رحیم یار خان ٹرین حادثہ کے زخمیوں کو علاج کی بہتر سہولیات فراہم کرنی چاہیے جو افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ ان کو نہیں دی جا ری ہیں۔حکومت پر تنقید کی وجہ ہی یہی ہے کہ یہ الیکٹڈ نہیں سلیکٹڈ حکومت ہے۔یہ سلیکٹڈ حکومت اس ملک کی عوام کے ووٹوں سے نہیں بلکہ کسی اور کی خواہش اور سازش کے تحت آئی ہے۔ اس لیے اس کی توجہ بھی عوامی مسائل کی بجائے دیگر معاملات پر ہے۔

سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی ،چیئرمین بلاوت بھٹو زرداری ایک مریض کی عیادت کرتے ہوئے

ایک جانب کشمیر پر تاریخی حملہ اور دوسری جانب کرتار پور بارڈر کھولا جا رہا ہے!،عمران خان ہمارے کشمیری بہن بھائیوں کو کیا پیغام دینا چاہتا ہے؟ کہ نہ تو وہ ان کیلئے آواز اٹھانا نہ لڑنا چاہتے ہیں بلکہ ان کے ساتھ اظہار یکجہتی کیلئے بھی کھڑے نہیں ہوسکتے؟۔
ان کا کہنا تھا کہ پاکستان پیپلز پارٹی کسی دھرنے میں حصہ نہیں لے رہی تاہم پاکستان پیپلزپارٹی کی کور کمیٹی اس فیصلہ سے متعلق نظرثانی کر سکتی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  تین بار سوئس کیسز میں مخالفین کو ناکامی ہوئی اور سابق صدر باعزت بری ہوئے:بلاول بھٹو زرداری

اپنا تبصرہ بھیجیں