Durj

آخر کار ’’درج ‘‘کو پاکستانی سینما میں دکھانے کی اجازت مل ہی گئی

EjazNews

شمعون عباسی کی ہوم پروڈکشن میں بننے والی فلم درج کو سینسر بورڈ نے فل بورڈ کر دیا تھا جس کے بعد یہ پاکستان میں ریلیز نہیں ہوسکتی تھی ۔ میڈیا پر چلنے والی مہم اور شمعون عباسی کے متحرک ہونے کے بعد سینسر بورڈ نے دوبارہ اس فلم کو دیکھا اور اسے ریلیز کی اجازت مل گئی۔
یہ فلم تشدد سے بھرپور فلم ہے جو کہ پنجاب میں پکڑے جانے والے اس کیس سے تعلق رکھتی ہے جس میں بتایا گیا تھا کہ کچھ لوگ قبروں سے انسانی جسموں کو نکال کر کھاتے ہیں۔
یہ فلم فرانس کے میلے میں بھی دکھائی گئی ہے۔ اس کے ساتھ ایک اور پاکستانی فلم ’’رانی‘‘ بھی دکھائی گئی تھی۔

شمعون عباسی نے سوشل میڈیا کے ذریعے دانیال گیلانی کا شکریہ ادا کیا کہ انہوں نے اس فلم کے پاس ہونے میں مدد کی ہے۔ اب اس فلم کو دیکھنے کے بعد ہی اندازہ ہو سکتا ہے کہ فلم میں کیا تھا جس کی وجہ سے سینسر بورڈ نے اسے پہلے مرحلے میں اجازت نہیں دی تھی

یہ بھی پڑھیں:  ہمایوں سعید بھی وزیراعظم فنڈ کیلئے میدان میں آگئے

اپنا تبصرہ بھیجیں