sri lank batsman

پاکستانی ٹیم ایک مرتبہ پھر کلین سویپ

EjazNews

پاکستان اور سری لنکا کی کرکٹ ٹیموں کے درمیان تیسرا اور آخری ٹی ٹونٹی میچ قذافی سٹیڈیم لاہور کھیلا گیا۔سری لنکن ٹیم نے ٹاس جیت کر حسب معمول تیسرے ٹی ٹونٹی میں بھی پہلے بیٹنگ کی اور پاکستانی ٹیم کو جیتنے کیلئے148رنز کا ہدف دیا۔سری لنکن ٹیم کی پہلی وکٹ 24 رنز پراس وقت گری ۔جبکہ محض 30سکوروں پر سری لنکا کی تیسری وکٹ بھی گر چکی تھی۔چوتھا کھلاڑی 58رنز پر پویلین لوٹا۔ان 58رنز کے بعد سری لنکا کی ٹیم میں سنبھالا آیا اوراوشادا فرنینڈو 77رنز کی شاندار اننگز کھیلے۔

پاکستانی ٹیم کے جوانوں کی کارکردگی اس قدر شاندار تھی کہ اس سیریز کی اگر میں پوری روداد لکھوں تو یہ ہی کافی ہو گا کہ اب اس ٹیم کو کچھ ریسٹ دینا چاہئے اور خاص کر ان کھلاڑیوں کو رو ضرور جو اچھی کارکردگی دکھانے سے ہمیشہ سے قاصر ہیں

سری لنکن کھلاڑی کو آئوٹ کرنے کی خوشی مناتے ہوئے

اس میچ کی ایک خاص بات یہ تھی کہ اس میچ کو پنک ربن مہم سے منسوب کیا گیا ہے۔ یعنی میچ کے ذریعے چھاتی کے سرطان سے متعلق آگاہی پیدا کرنے کے لیے تاریخ میں پہلی بار قذافی سٹیڈیم کو گلابی رنگ میں رنگ دیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  یہ وہ لوگ ہیں یا تو پاکستان بچے گا یا پھر یہ لوگ:وزیراعظم
سٹیڈیم کو پنک کیا گیا ۔ اس کا مطلب چھاتی کے سرطان سے متعلق آگاہی پیدا کرنا تھا

یہ بات ہے کہ دنیا میں ہر نو میں سے ایک خاتون میں چھاتی کا سرطان پایا جاتا ہے اور اگر اس کی جلد تشخیص ہو جائے تو بچنے کے امکانات 90 فیصد تک ہو تے ہیں۔چھاتی کے سرطان سے متعلق ملک عزیز میں آگاہی بہت کم ہے اسی لیے ایشیاء میں پاکستان وہ ملک ہے جس میں یہ سرطان سب سے زیادہ پایا جاتا ہے۔

بس جان لیجئے

اپنا تبصرہ بھیجیں