business-morning

کرونا وائرس دنیا کے کئی ممالک کی معیشتیں لے ڈوبے گا:اقوام متحدہ

EjazNews

امریکہ میں کرونا وائرس کی وبا بے قابو ہوتی جارہی ہے۔ امریکہ میں 4لاکھ سے زائد افراد متاثر ہو چکے ہیں اور 14ہزار سے زائد اموات ہو چکی ہیں۔ کرونا وائرس سے سب سے زیادہ امریکہ میں نیو یارک متاثر ہوا ہے ۔ اور اس شہر میں ہی سب سے زیادہ اموات ہوئی ہیں۔ اس کے بعد دوسرا متاثرہ شہر واشنگٹن ہے ۔جس میںہلاکتوں کے بعد بلا ضرورت گھر سے نکلنے پر پابندی عائد کر دی گئی ہے ۔ یہ دونوں شہر بہت زیادہ آبادی والے شہروں میں شمار ہو ت ہیں۔ جبکہ امریکہ ہی کی ریاست نیو جرسی میں 1504افراد ہلاک ہوئے ہیں۔
دنیا بھر میں قیاس کیا جارہا تھا کہ گرم موسم آتے ہی کرونا وائرس کی تباہ کاریاں ختم ہو جائیں گی لیکن امریکہ سائنس دانوں کا بیان اس کے برعکس ہے وہ کہہ رہے ہیں کہ اس بات کو یقینی طور پر نہیں کہا جاسکتا کہ گرم موسم میں اس کا زور ٹوٹ جائے گا۔
پوری دنیا کا نظام اس وقت مفلوج ہو چکا ہے ۔ روزانہ سینکڑوں افراد اس وائرس کی وجہ سے موت کی وادی میں جارہے ہیں ۔ یہ کسی جنگ کی وجہ سے نہیں مر رہے بلکہ ایک وائرس کی وبا سے متاثر ہو رہے ہیں۔ دنیا بھر میں وائرس سے متاثرہ لوگوں کی تعداد 15لاکھ سے زائد ہو چکی ہےجبکہ دنیا بھر میں 88ہزار سے زائد لوگ اس وائرس کی وجہ سے موت کے منہ میں جا چکے ہیں۔
اقوام متحدہ کی ٹاسک فورس نے ایک رپورٹ جاری کی ہے جس کے مطابق کرونا وائرس کئی ممالک کی معیشتوں کو لے ڈوبے گا۔ جس سے سنگین نتائج کا خطرہ ہے۔ جبکہ اقوام متحدہ کی رپورٹ میں قرضوں کی معطلی کی بھی سفارش کی گئی ہے ۔
اقوام متحدہ کے سیکرٹری جرل انتو نیو گو تریس نے دنیا بھر کے متنازع علاقوں میںجنگ بندی کی اپیل کی ۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ اپیل کشمیر میں ایل او سی پر بھارتی خلاف ورزیوں کے متعلق بھی ہے۔اس سے قبل وہ 23مارچ کو بھی پوری دنیا سے جنگ بندی کی اپیل کر چکے ہیں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں