گھریلو ٹوٹکے

گھریلو-ٹوٹکے
EjazNews

نانیوں اور دایوں کے ٹوٹکے پیش کرتے ہیں جو آزمودہ اور سستے ہونے کے ساتھ ساتھ تیر بہدف بھی ثابت ہو تے ہیں۔
میدہ بیسن اورکیڑے:
میدہ، آٹا اور بیسن میں برسات کے موسم میں کیڑے پڑ جاتے ہیں۔ اگر ان چیزوں میں تیزپات کے پتے رکھ دئیے جائیں تو کیڑے نہیں پڑیںگے۔
بانس کی اشیاء:
بانس کی پتیلیوں کی میٹس بہت خوبصورت لگتی ہیں مگر بار بار دھونے سے ان کی خوبصورتی ختم ہو جاتی ہے۔ ان میٹس کو چائے کے قہوے میں اگر ڈبو دیا جائے تو خشک ہونے پر دلکش لگنے لگتی ہیں۔
پھلوں کے داغ:
کپڑوں پر اگر پھلوں کے داغ لگ گئے ہوں تو ان کو دور کرنے کے لئے داغوں کو گرم پانی میں لیموں ڈال کر دھوئیں، پھر صابن سے دھوئیں اور صاف پانی سے کھنگال لیں۔ داغ بالکل صاف ہو جائیں گے۔
خون کے دھبے:
سادہ کپڑے پر اگر خون کے داغ دور کرنے ہوں تو اسے امونیا سے صاف کرلیں، کپڑا صاف ہو جائے گا۔
گھی کے داغ:
کسی سادہ کپڑے پر گھی یا چکنائی کا داغ لگ جائے تو داغ پر فوراً تھوڑا سا ٹالکم پائوڈر چھڑک دیں اور چند منٹ بعد جھاڑ دیں۔ داغ دور ہو جائے گا۔
ریشمی کپڑوں پر چکنائی:
اگر ریشمی کپڑوں پر چکنائی، تیل یا گھی وغیرہ کا داغ لگ جائے تو تھوڑا سا امونیا پانی میں حل کر کے داغ پر لگائیں، داغ دور ہو جائے گا۔
گرم کپڑوں پر تیل کے داغ:
گرم کپڑوں پر یعنی موسم سرما کے استعمال ہونے والے کپڑوں پر اگر تیل وغیرہ یا کسی چکنی چیز کا داغ لگ جائے تو ذرا سا پیٹرول دھبہ پر آہستہ آہستہ لگائیں داغ دور ہو جائے تو کپڑا دھوپ میں پھیلا دیں۔ کپڑوں کی بو بھی دور ہو جائے گا۔
سیاہی یا کاجل کے داغ:
کپڑوں پر سیاہی یا کاجل وغیرہ کے سیاہ داغ صاف کرنے کے لئے سیاہی پر نمک رگڑ دینے سے داغ صاف ہو جاتا ہے۔
پکے رنگ کا دھبہ:
کپڑے پر کسی رنگ کا داغ لگ گیا ہو تو روئی کا ٹکڑا لیں اسے میتھلڈ اسپریٹ میں جس میں ذرا سا امونیا بھی ملا ہوا ہو، بھگوئیں۔ اس بھیگے ہوئے روئی کے ٹکڑے کو ا حتیاط سے دھبہ کے اوپر رکھیں، تین چار دفعہ دبائیں اور پھر رگڑیں ، داغ دور ہوجائے گا۔
عطر کا دھبہ:
اگر کپڑوں پر عطر کا دھبہ پڑ جائے تو داغ پر ٹاٹری مل دیں اور پھر نیم گرم پانی سے دھو ڈالیں۔
پان کا داغ:
پان کی پیک کا داغ صاف کرنے کے لئے پیاز کا باریک چورا داغ پر ملئے تو داغ دور ہو جاتا ہے۔
پیتل کے برتن اور گلدان:
پیتل کے برتن یا گل دان وغیرہ میلے ہو کر کالے پڑ جاتے ہیں۔ جو بہت برے معلوم ہوتے ہیں۔ ا ن کالے پیتل کے برتنوں یا آرائشی اشیا ء پر ایک سنگترہ کا ٹ کر خوب ملیں۔ ذرا سی دیر میں برتن صاف ہو جائیں گے۔
ریشمی کپڑے:
ریشمی کپڑے اگر اپنی چمک کھونے لگیں تو ان کو مزید چمکانے کے لئے ایسے پانی میں دھوئیں جس میں آلو ابالے گئے ہوں۔
شیشے کی صفائی:
میلا ، دھندلا یا داغدار شیشہ صاف کرنے کے لئے ململ کے کپڑے کا ٹکڑا تیل ملے پانی میں بھگو کر شیشے پر خوب ملئے اور پھر پانچ منٹ خشک ہونے دیں جب تیل خشک ہو جائے تو ململ کے صاف ٹکڑے سے خوب اچھی طرح شیشہ صاف کر دیں، نہایت چمکدا ر ہو جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں