گلگت بلتستان کی حکومت نے کروناوائرس کیلئے بہترین اقدامات کیے:معاون خصوصی برائے صحت

dr-zafar
EjazNews

وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت نے روزانہ کی بنیاد پر دی جانے والے اپنی میڈیا بریفنگ میں کہا ہے کہ عالمی سطح پر کیسز 17لاکھ سے زائد ہوچکے ہیں، ایک لاکھ سے زائد اموات اور 4لاکھ سے زائد صحت یاب ہوئے ہیں۔ ‘پاکستان کے لیے گزشتہ 24 گھنٹے زیادہ بھاری تھے کیونکہ اب تک کی سب سے زیادہ 14 اموات رپورٹ ہوئیں۔ ‘ہم کہتے رہے ہیں کہ آنے والے دنوں میں اس طرح کی خبریں متوقع ہیں، کل ہم نے کہا تھا کہ 50 مریض وینٹی لیٹر پر ہیں تو ہم کہہ سکتے ہیں ان میں سے 14 مریض اپنی جان کھو بیٹھے ہیں۔
ان کا مزید کہنا تھا کہ آنے والے دنوں میں یہ شرح بڑھ بھی سکتی ہے اسی لیے ہم گھروں میں رہنا، اپنی صفائی کا خیال رکھنا، اپنے اور دوسرے لوگوں کا خیال رکھنا اور فاصلہ رکھنا اور ہاتھ دھونے کے لیے بار بار ہدایت کرتے ہیں۔ گزشتہ 24 گھنٹوں میں 14 اموات کے علاوہ 254 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جو نسبتاً بڑی شرح ہے اور اب تک مجموعی تعداد 5 ہزار سے تجاوز کرگئی ہے۔5 ہزار سے زائد مریضوں میں سے تقریباً نصف ایسے ہیں جو مقامی طور پر تبادلے سے ہوئے ہیں جبکہ نصف تعداد باہر سے آئے ہیں۔پاکستان میں صحت یاب ہونے والے افراد کی تعداد بھی بڑھ گئی ہے۔
گلگت بلتستان کی حکومت کی تعریف کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ گلگت بلتستان کی حکومت نے کرونا وائرس روکنے کے لیے بہترین انتظامات کیے ہیں۔

ماسک کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ دیکھنے میں آرہا ہے کہ n95ماسک سب کو پہننے کی ضرورت نہیں ہے۔ اور وہ لوگ بھی پہن رہے ہیں جن کو اس کی ضرورت نہیں ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں