ماں باپ کی لڑائی بچوں کی ذہنی صحت متاثر کرتی ہے؟

women-with-child

ماں باپ کی لڑائی کی وجہ سے بچے اپنے ہی ہم سفروں سے پیچھے رہ جاتے ہیں اور ایسا صرف پاکستان میں نہیں دنیا بھر میں ہوتا ہے کہ ماں باپ کی لڑائی کے اثرات بچوں کی زندگیوں پر بھی پڑتے ہیں۔ یہ ماں باپ ہر درجے سے تعلق رکھتے ہیں ۔ امیر بھی ہوتے ہیں اور درمیانے درجے کے بھی۔ یہ بچے آپ کے کلاس فیلو اور دوست بھی ہوسکتے ہیں ۔
بعض بچے بڑے شارپ ہوتے ہیں یہ بہت آگے جاسکتے ہوتے ہیںمگر جب وہ گھر سے صبح سویرے الجھے ہوئے ذہنوں سے آتے ہیں اور ماں باپ کی لڑائیوں کی وجہ سے وہ کونوں کھدروں میں روتے ہیں۔یہ وہ لمحے ہوتے ہیں جب وہ اپنے آپ سے دور ہو رہے ہوتے ہیں۔ ذہنی تناﺅ کی وجہ سے ان میں چڑچڑا پن آجاتا ہے۔ بات بات پر لوگوں سے لڑتے ہیں ۔ ہم انہیں نارمل سمجھنا چھوڑ دیتے ہیں، یہ بچے عموماً لوگوں میں گھل مل کر نہیں رہ پاتے۔ اس کی وجہ صرف والدین ہوتے ہیں۔ ان کی لڑائیوں نے ان میں ذہنی تناﺅ پیدا کر دیا ہوتا ہے۔
یہ 1980ءکا زمانہ تھا ۔ میرے آٹھ دس دوست تھے۔ میرا یقین ہے کہ اگر والدین ان کو ماحول دیتے تو وہ آج کامیاب ترین بچوں میں شامل ہوتے کیونکہ وہ ٹاپر تھے۔لیکن ماں باپ کی لڑائیوں نے ان کو ذہنی پریشانیوں میں مبتلا کر دیا تھا ان کی توجہ ان جھگڑوں کی طرف رہتی تھی۔ کلاس روم میں وہ پڑھنے کی بجائے اپنی سوچوں میں غرق ہوتے تھے ۔ایک دن میں نے اپنے کلاس فیلو سے پوچھا کہ کیاسوچ رہے ہو اس نے کہا کہ مجھے تو یہ خیال آرہاہے اس وقت گھر میں میری ماں کے ساتھ کیاسلوک ہو رہا ہوگا۔
ہر وقت گھر میں دنگا فساد کرنے والوں نے یہ کبھی نہیں سوچا ہوگا کہ ان کے بچوں کی نفسیات پر کیا اثر ہوگا؟۔کاش ماں باپ گھر میں لڑنے سے پہلے یا باپ اپنی بیگم پر ہاتھ اٹھانے سے پہلے یہ سوچ لے جو ان کی اس سرشت کودیکھ رہے ہیں اس سارے معاملے کا بھیانک اثر ان کی ناصرف ذہنی بلکہ جسمانی صحت پر بھی مرتب ہورہا ہے۔یہ سوچ لینے سے شاید ان کے گھریلو حالات بھی بہتر ہو جاتے اور ان کے بچوں کی زندگی بھی سنور جاتی ۔
بدقسمت والدین ہی بچوں سے ان کا درخشاں مستقبل چھین لیتے ہیں۔ کاش یہ لو گ گھرمیں داخل ہونے سے پہلے یہ سوچ لیں کہ اس کے بچے بھی ہیں تو ان کا مستقبل بھی اچھا ہو سکتا ہے۔
اس بارے میںدنیا بھر میں تحقیقات بھی ہو رہی ہیں اور بہت سے نتائج بھی اخذ ہوئے ہیں۔ جن کا لبے لباب یہی نکلتا ہے کہ والدین سے بچے سب سے زیادہ متاثر ہوتے ہیںاور وہ ان کے معاملات کو دیکھ کر ہی سیکھے ہیں ۔ گھر کا ماحول انہی کی ذہنی و جسمانی صحت پر اہم ترین اثر کر تا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں