صحت مندی کیلئے لیموں اور اجوائن کے فوائد

lime_ajwin

لیموں ایک ایسی چیز ہے جو گھروں میں بہت عام استعمال ہوتی ہے اس کے چھلکوں، عرق اور دیگر میں بھی متعدد طبی فوائد پائے جاتے ہیں۔ وٹامن سی سے بھرپور ہونے کے باعث اسے متعدد فوائد کا حامل مانا جاتا ہے مگر کیسا آپ کو معلوم ہے۔ یہ متعدد امراض سے تحفظ دینے کےلیے بھی مفید ہے ؟ لیموں کی مہک سانس کو تازہ رکھتی ہے خاص طور پر اگر آپ ایک گلاس نیم گرم پانی میں ایک لیموں کے عرق سے کئی بار کلیاں کریں۔ امریکن ہارٹ ایسوسی ایشن نے ایک تحقیق جاری کی جس کے مطابق جو خواتین بڑی مقدار میں ترش پھلوں کا استعمال کرتی ہیں ان میں خون کی شریانوں کے امراض سے ہونے والے فالج کا خطرہ کافی حد تک کم ہو جاتا ہے آپ نے ہو سکتا ہے کبھی غور کیا ہو کہ اسکن کیئر کی مصنوعات پر وٹامن سی کا ذکر ضرور ہوتا ہے اور اس کی وجہ یہ ہے کہ اس وٹامن کو ایک ہارمون کو لیگن کی مقدار میں اضافے کے لیے اہم مانا جاتا ہے، یہ ہارمون جلد کی مضبوطی اور لچک کے لیے اہم ہے جبکہ لیموں میں اینٹی آکسائیڈ بھی ہوتے ہیں جو جلد کو ہموار سرخی مائل اور لچکدار رکھنے کے لیے فائدہ مند ہوتے ہیں۔ طبی تحقیقی رپورٹس ے ثابت ہوا ہے کہ پوٹاشیم جو لیموں میں پایا جاتا ہے ، کیلشیم اور دیگر معدنیا ت کو اکھٹا ہو کر گردو ں میں پتھری کی شکل میں بدلنے سے روکنے کے حوالے سے مددگار ثابت ہوتا ہے تو لیموں پانی سے لطف اندوز ہوں مگر کوشش کریں کہ اس میں چینی کا اضافہ نہ کریں کیونکہ اس سے گردوں میں پتھری کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔ طبی ماہرین کے مطابق لیموں کا تازہ عرق پانی میں روزانہ ملا کر پینا جسم کے اندر پانی کی سطح کو توازن میں رکھنے کا ایک بہترین طریقہ ہے، لیموں کا عرق جسم کے اندر جا کر الکلی میں تبدیل ہو جاتا ہے اور جوڑوں کی سوجن سے بچائو میں مدد گار ثابت ہو سکتا ہے۔ لیموں کی تیز ترش مہک کیفین یا چینی کے بغیر توانائی کی لہر فراہم کرتی ہے، طبی ماہرین کے مطابق لیموں کو دماغ کو تحرک دینے والا مہلول تصور کیا جاتا ہے اور ایک تحقق کے مطابق یہ لوگوں کے مزاج اور توانائی کی سطح کو بہتر بناتی ہے۔ لیموں کا عرق اور دیگر تیزابی مشروبات کا زیادہ استعمال دانتوں کےلیے نقصان دہ ہو سکتا ہے ، طبی ماہرین کے مطابق ترش مشروبات سے دانتو ں کے گرنے کا خطرہ بڑھ جاتا ہے اور اس بات کا خیال رکھیں کہ کسی بھی ترش غذا یا مروب کے استعمال کے آدھے گھنٹے بعد تک دانتوں پر برش نہ کریں کیونکہ اس سے دانتو ں کی سطح کو نقصان پہنچ سکتا ہے۔ لیموں میں شامل وٹامن سی اینیمیا کے خلاف لڑتا تو نہیں مگر یہ آئرن کی طاقت کو ضرور بڑھاتا ہے جو اس بیماری کی روک تھام میں مددگار ثابت ہوتا ہے۔ ایک تحقیق کے مطابق وٹامن سی کے ساتھ آئرن کو کھانا ہمارے جسم میں آئرن کو جذب کرنا آسان کر دیتا ہے۔آئرن سے بھرپور غذائوں میں لیمو ں کو چھڑکنے سے نہ صرف ذائقہ بڑھتا ہے بلکہ آئرن کے تمام فوائد بھی حاصل ہوتے ہیں۔
پیٹ باہر نکلا ہو تو آپ کی ساری شخصیت بہت بھدی معلوم ہوتی ہے اور یہ کسی کو بھی اچھا نہیں لگتا اور جو فرد اس کا شکار ہوں ان کی پریشانی قابل فہم ہوتی ہے تاہم یہ بھی حقیقت ہے کہ توند کی چربی کو گھلانا کوئی آسان کام نہیں ہوتا۔ تاہم کچن میں موجود چند چیزیں ضرور ایسی ہوتی ہیں جو چند کلو وزن کم کرنے میں مدد دے سکتی ہیں۔جسمانی وزن میں کمی کیلئے اپنی غذائی کیلوریز کو جلائی جانے والی کیلوریز سے کم رکھنے کی ضرورت ہوتی ہے مگر یہ بھی کوئی آسان کام نہیں ہوتا۔ اسی طرح ورزش، صحت مند طرز زندگی اور متوزن غذا اس مقصد کے حصول میں مدد دیتے ہیں۔ تاہم گھر میں موجود ایک مصالحے کا روزانہ استعمال کر کے بھی آپ کافی حدتک یہ مقصد حاصل کر سکتے ہیں اور وہ ہے اجوائن۔ اپنے منفرد ذائقے اور مہک کی بدولت یہ مصالحہ لگ بھگ ہر گھر کے کچن میں موجود ہوتا ہے جو کہ جسم کو بدہضمی سے نجات دلانے میں مددیتاہے۔ مگر کیا آ پ کو معلوم ہے کہ 2طریقوں سے اس سے جسمانی وزن یا توند میں بھی کمی لائی جاسکتی ہے؟ ۔ایک طریقہ کار کے تحت ایک کھانے کے چمچ اجوائن کے بیجوں کو ایک لیٹر پانی میں ابالیں اور اسے دن بھر پینا عادت بنائیں۔ اجوائن نظام ہاضمہ کو بہتر جبکہ خوراک کے جذب ہونے میں مدد دینے والا مصالحہ ہے جس سے چربی ذخیرہ ہونے کا امکان کم ہو جاتا ہے اور توند میں تیزی سے کمی آتی ہے۔ اسی طرح ناشتے سے آدھے گھنٹے پہلے ایک چھوٹا چمچ اجوائن کو چبانا توند سے نجات میں مددیتا ہے ایسا کرنے سے جسم کو ناشتے کے ساتھ ساتھ رات کے کھانے کو ہضم کرنے میں مدد ملتی ہے جبکہ مٹا بولزم کی رفتار بھی بڑھتی ہے جس سے چربی تیزی سے اور موثر طریقے سے کھلتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں