انڈیا میں آسمانی بجلی گرنے سے سو سے زائد افراد ہلاک

sky_alactric
EjazNews

انڈیا کی شمالی ریاست بہار اور اترپردیش میں آسمانی بجلی گرنے سے ایک دن میں سو سے زیادہ افراد ہلاک ہو گئے ۔انڈیا میں مون سون کی آمد کے بعد طوفانی بارشیں ہو رہی ہیں۔
انڈین میڈیا کے مطابق بہار میں آسمانی بجلی کی زد میں آ کر مرنے والوں کی تعداد 92 ہو گئی ہے۔اس سے قبل یہ تعداد 83 بتائی گئی تھی، جمعہ کو بہار کے گوپال گنج میں آسمانی بجلی گرنے سے مزید اموات کے نتیجے میں اب یہ تعداد 92ہوگئی ہے۔
دوسری جانب اتر پردیش میں جمعرات کی شام آسمانی بجلی گرنے کے واقعہ میں 24 افراد کے ہلاکتوں کی اطلاعات ہیں۔بہار اور اتر پردیش کے کل 31 اضلاع میں آسمانی بجلی گرنے سے ایک سو 16 اموات ہوئی ہیں۔ بہار کے 23 اضلاع سے ہلاکتوں کی خبریں ہیں اور سب سے زیادہ 13 ہلاکتیں گوپال گنج سے بتائی جا رہی ہیں جبکہ آٹھ مدھوبنی ضلع سے بتائی گئی ہیں۔مرنے والے زیادہ تر افراد اس وقت کھیتوں میں کام کر رہے تھے اور اچانک آندھی آنے اور بجلی گرنے سے ان کی موت ہوئی ہے۔
اترپردیش میں بی جے پی کی حکومت ہے جبکہ بہار میں بی جے پی کی حمایت والی نتیش کمار کی حکومت ہے۔

ممبئی میں بارشوں سے18افراد ہلاک

بہار اور دوسری شمالی مشرقی ریاستوں میں بارش کے اس موسم میں سیلاب آنے کا شدید خدشہ رہتا ہے جس میں ہر سال سینکڑوں افراد ہلاک اور ہزاروں بے گھر ہو جاتے ہیں۔ بہار کے سرحدی علاقے میں نیپال کے ساتھ دریاؤں کے بند کی مرمت کی وجہ سے تنازع ہے اور ضرورت سے زیادہ پانی چھوڑنے پر ریاست بہار سیلاب کا الزام اکثر نیپال پر لگاتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں